Nazia Hassan
Nazia Hassan

Nazia Hassan News By Daily Karachi

کراچی:پاکستان کی مایہ نازسنگرنازیہ حسن کو ہم سے بچھڑے سولہ برس بیت گئے لیکن لازوال گیتوں کی بدولت ان کی یادیں آج بھی تازہ ہیں۔

پیار کی باتیں کرنے والی نازیہ حسن پر آج بھی سب کو ناز ہے۔ تین اپریل انیس سو پینسٹھ کو کراچی میں آنکھ کھولی۔ خوبصورتی،  ٹیلنٹ اور شہرت میں اپنی مثال آپ نازیہ حسن نوعمری میں ہی چھا گئیں۔

پاکستان ٹیلی ویژن کے پروگرام سنگ سنگ چلیں سے گلوکاری کا آغاز کرنے والی نازیہ نے لندن سے موسیقی کی تربیت حاصل کی تھی۔ بھارتی فلم میں گائے ان کے گانے ’’آپ جیسا کوئی میری زندگی می آئے تو بات بن جائے‘‘ نے انہیں راتوں رات شہرت کی بلندیوں پر پہنچا دیا اور پھر بات ایسے بنی کہ  دنیا بھرمیں ’’ڈسکو دیوانے‘‘ کی دھوم مچ گئی۔

ڈسکو دیوانے کے بعد بوم بوم ، ینگ ترنگ ، ہاٹ لائن اور کیمرہ کیمرہ کے نام سے البمز نے انہیں شہرت کے بام عروج پر پہنچا دیا۔قانون کی تعلیم حاصل کرنے والی یہ دلکش گلوکارہ اقوام متحدہ کی ثقافتی سفیر بھی رہی۔ ۔

لوگوں میں خوشیاں بانٹنے والی نازیہ حسن کی اپنی زندگی تلخیوں کا شکاررہی۔ ناکام شادی اور کینسر نےنازیہ کو روگ لگا دیا اور وہ محض چھتیس برس میں تیرہ اگست دو ہزار کو زندگی کی بازی ہار گئیں لیکن آج بھی پرستاروں کے دلوں میں زندہ ہیں۔

LEAVE A REPLY